57

تمام سرکاری, نجی ادارے ثقافتی تقریبات کیلئے کھولے جائیں، معروف ایونٹ آرگنائزر سید سہیل بخاری

لاہور(ٹیوٹرپاکستان) ایشین کلچرل ایسوسی ایشن آف پاکستان کے سیکرٹری جنرل و چیئرمین ایشین ایوارڈز کمیٹی و معروف ایونٹ آرگنائزر و کمپیئر سید سہیل بخاری نے حکومت سے اپیل کی ہے کہ جس طرح تعلیمی ادارے سرکاری، پرائیوٹ ادارے، مارکیٹ احتیاطی تدابیر کے ساتھ کھولے گئے ہیں اسی طرح الحمراء ہال شاھراہ قائد اعظم،کلچرل کمپلیکس، پنجابی کمپلیکس قذافی سٹیڈیم لاہور، پاکستان نیشنل کونسل آف دی آرٹس اور ضلعی آرٹس کونسلوں میں تقریبات اور ڈرامہ، ثقافتی پروگرامز، صوفی فیسٹیول اور دیگر پروگرامز کرنے کی اجازت دی جائے کیونکہ زیادہ تقریبات انہی اداروں میں منعقد ہوتی ہیں ان ہالز کی بندش سے ہزاروں فنکار،ٹیکنیشنز بے روزگار ہو چکے ہیں اور تقریباََایک سال سے ان کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے ہو چکے ہیں۔ سید سہیل بخاری نے مزید کہا کہ گورنر ھاؤس لاھور، سرینا ھوٹل اسلام آباد وفاقی حکومت کے سرکاری اداروں میں کرونا ڈرکر بھاگ جاتا ہے، گورنرھاؤس لاہور میں روزانہ کی بنیاد پر پروگرام ہوتے ہیں اورہوتے رہے ہیں ایک ملک میں دواور تین قانون نافذ ہوچکےہیں حکومت پنجاب کی جانب سے آرٹسٹ سپورٹ فنڈز سے بھی شوبز سے تعلق رکھنے والے افراد کو ماہانہ 5،ہزار روپے6، ماہ سے نہیں ملے، شوبز سےوابستہ افراد ٹیکنیشنز، فنکار اور شوبز کے دیگرشعبہ کے افراد بھی مطالبہ کرتے ہیں کہ انکی 6ماہ کی گرانٹ جلد ادا کی جاۓ ۔سید سہیل بخاری نے حکومت پنجاب اور حکومت پاکستان سے مطالبہ ہے کہ فوری طور ان اداروں میں پروگرامز کرنے کی پابندی ختم کی جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں