30

لاہور کے حلقہ این اے 133 میں مسلم لیگ (ن)کی امیدوار شائستہ پرویز ملک 46،811 ووٹ لیکرکامیاب،اللہ کا شکرہے‘شیروں کو مبارک ۔ اک واری فیر،شیر ، الحمدللہ۔مریم نواز

لاہور(سدید نیوز، ایجنسیاں) مسلم لیگ (ن) نے لاہور کے حلقہ این اے 133کے ضمنی انتخاب میں اپنی نشست جیت لی، پیپلز پارٹی چوتھے سے دوسرے نمبر پر آگئی۔غیر حتمی اور غیر سرکاری اعدادو شمار کے مطابق مسلم لیگ (ن)کی امیدوار شائستہ پرویز ملک 46،811 ووٹ لیکر جیت گئیں،جنہوں نے پیپلز پارٹی کے چودھری اسلم گل کو 14498ووٹوں سے شکست دی۔چودھری اسلم گل 32 ہزار 313ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔ یہ نشست مسلم لیگ (ن)کے رکن قومی اسمبلی ملک محمد پرویز کے انتقال کے باعث خالی ہوئی تھی ۔ مسلم لیگ (ن)اور پیپلز پارٹی کے علاوہ تحریک جوانان پاکستان اور نیشنل فرنٹ پاکستان نے بھی امیدوار میدان میں اتارے تھے ۔ سات آزاد امیدوار بھی مدمقابل تھے۔ حکمران جماعت کے امیدوار جمشید اقبال چیمہ اور ان کی اہلیہ مسرت جمشید چیمہ کے کاغذات نامزدگی مسترد ہوگئے تھے۔2018ءکے عام انتخابات میں 13ہزار235ووٹ حاصل کرنے والی تحریک لبیک پاکستان نے لانگ مارچ کے باعث ضمنی انتخاب میں کوئی امیدوار میدان میں نہیں اُتارا تھا۔ن لیگیوں نے کامیابی پر جشن منایا، مٹھائیاں تقسیم کیں، ڈھول کی تھاپ پر بھنگڑےڈالے، آتشبازی کی اور شیر آیا شیر آیا کے نعرےلگائے۔مسلم لیگ ن کی نائب صدرمریم نواز نے لیگی امیدوار کی کامیابی پر کہا کہ اک واری فیر شیر۔مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کا کہنا تھا کہ عوام کے اعتماد پر پورا اتریں گے۔ الیکشن کمیشن کے اعدادو شمار کے مطابق نیشنل فرنٹ پاکستان کی امیدوار سیدہ غلام فاطمہ گیلانی نے 377 اور تحریک جوانان پاکستان کے عبدالعزیز نے 144ووٹ حاصل کیے۔ محمد نواز 115ووٹ لیکر سات آزاد امیدواروں میں پہلے نمبر پر رہے۔مسلم لیگ (ن) کو 2018کے عام انتخابات کے مقابلے میں 42ہزار888ووٹ کم ملے جبکہ 2018کے الیکشن میں مسلم لیگ ن کے پرویزملک نے 89ہزار699 ووٹ لیے تھے۔پیپلزپارٹی کے اسلم گل نے 2018 کے انتخابات کے مقابلے میں 26 ہزار 728 ووٹ زیادہ حاصل کیے ۔ انہوں نے 2018 کے الیکشن میں 5585 ووٹ لیے تھے۔2018 کے الیکشن میں تحریک انصاف کے اعجازچوہدری نے77ہزار293ووٹ لیےتھے لیکن ضمنی الیکشن میں پی ٹی آئی کا کوئی امیدوار میدان میں نہیں تھا۔۔2018کے عام انتخابات میں این اے133میں51.89 فیصد ووٹ کاسٹ ہوئےتھے جبکہ ضمنی الیکشن میں 18.59 فیصد ووٹ کاسٹ ہوئے۔ انتخابی عمل کو صاف، شفاف، پرامن اور قانون کے مطابق بنانے کے لئے الیکشن کمیشن نے غیر معمولی انتظامات کیے اور پولیس کے ساتھ رینجرز کی بھی خدمات حاصل کیں رینجرز کے جوانوں نے دن بھر پولنگ سٹیشنوں کے باہر ڈیوٹی کرنے کے بعدگنتی کا مرحلہ مکمل ہونے کے بعد پریزائیڈنگ افسران کے ساتھ ریٹرننگ آفیسرز کو ووٹ کے تھیلے جمع کرائے ، نتائج کی بروقت اور شفاف ترسیل کے لئے الیکشن کمیشن نے آر ٹی ایس ٹیکنالوجی کا بھی استعمال کیا۔ این اے 133 کے ضمنی انتخابات میں کامیابی کی خوشی میں مسلم لیگ (ن) کے حامیوں نے بھرپور جشن منایا اور مٹھائیاں تقسیم کیں‘ ڈھول کی تھاپ پر بھنگڑے،آتشبازی کی ‘شیرآیا ، شیرآیا، کے نعرے لگائے‘ کامیابی پر مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف‘ نائب صدر مریم نوازنے شائستہ پرویز ملک ‘ عوام اور پارٹی رہنماؤں کو مبارک باددی ہے ۔ شہبازشریف نے کہا ہے کہ ہمیشہ کی طرح عوام کے اعتماد پر پورااتریں گے۔جبکہ مریم نوازنے شائستہ پرویز کی کامیابی پر مبارکباد دیتے ہوئے کہاکہ اللہ کا شکرہے‘شیروں کو مبارک ۔ اک واری فیر،شیر ، الحمدللہ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں