15

مختلف شہروں میں گیس غیراعلانیہ طور پر بند یا کم ہونے لگی

سردیوں کے آتے ہی شہریوں کے چولہے ٹھنڈے ہونے لگے۔ ملک کے مختلف شہروں میں گیس غیر اعلانیہ طور پر بند یا کم ہونے لگی، جس کے باعث شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔

کراچی، پشاور، کوئٹہ، گوجرانوالہ، ملتان، فیصل آباد، میرپورخاص سمیت کئی شہروں میں ناشتہ اور کھانا بنانا دوبھر ہوگیا۔ غیراعلانیہ گیس بندش اور پریشر میں کمی نے عوام کی پریشانی میں مزید اضافہ کردیا۔

کراچی کے مختلف علاقوں میں روزانہ صبح 8 سے شام 5 بجے تک گیس نہیں دی جارہی۔ ان علاقوں میں نیو کراچی، نارتھ کراچی، سر سید ٹاؤن الیون سی 2، بفرزون، ناگن چورنگی، ایف بی ایریا اور سرجانی ٹاؤن شامل ہیں۔

متاثرہ علاقوں کی خواتین کا کہنا ہے کہ صبح کے اوقات میں گیس نہ ہونے کی وجہ سے اسکول اور کالج جانے والے بچوں کو بنا ناشتے ہی گھر سے جانا پڑتا ہے۔

گیس کی لوڈشیڈنگ سے گھریلو صارفین کے علاوہ ہوٹل مالکان اور پکوان سینٹر والوں کا کاروبار بھی بری طرح متاثر ہوا ہے۔

ادھر کوئٹہ میں گیس پریشر میں کمی کے ساتھ ایل پی جی کی فی کلو قیمت میں ستر روپے کا اضافہ ہوگیا، ایک کلو ایل پی جی دو سو تیس روپے تک پہنچ گئی جبکہ گوجرانوالہ میں جلانے والی لکڑی کی قیمت بھی بڑھ گئی، فی من قیمت ساڑھے نو سو روپے تک پہنچ گئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں